Monday - 2018 Dec 17
Languages
دوستوں کو بھیجیں
News ID : 81215
Published : 22/8/2015 20:53

بان کی مون کی شمالی و جنوبی کوریا کو صبر و تحمل کی اپیل

اقوام متحدہ کے سیکریٹری جنرل نے شمالی اور جوبی کوریا سے صبر و تحمل سے کام لینے کی اپیل کرتے ہوئے کہا ہے کہ وہ کوئی ایسا اقدام نہ کریں جو کشیدگی بڑھنے کا باعث بن سکتا ہے- ذرائع کے مطابق سئول کی جانب سے اپنے شمالی پڑوسی کے خلاف سیاسی پروپیگنڈے کا سلسلہ بند کئے جانے اور پیونگ یانگ کی جانب سے فوج کو ہائی الرٹ کئے جانے کے بعد اقوام متحدہ کے سکریٹری جنرل بان کی مون نے شمالی و جنوبی کوریا کے حالات پر تشویش ظاہر کرتے ہوئے فریقین سے مزید صبر و تحمل سے کام لینے کی اپیل کی ہے- بان کی مون کے ترجمان اریک کانکو نے کہا ہے کہ اقوام متحدہ کے سیکریٹری جنرل نے شمالی و جنوبی کوریا سے اپیل کی ہے کہ وہ ایسے کسی بھی اقدام سے گریز کریں جو کشیدگی میں شدت آنے کا باعث بن سکتا ہے- انھوں نے دونوں ملکوں سے کشیدگی کم کرنے اور جزیرہ نمائے کوریا میں امن و استحکام برقرار رکھنے کے لئے مذاکرات شروع کرنے کی اپیل کی ہے- شمالی کوریا کی نیوز ایجنسی نے سنیچر کو رپورٹ دی ہے کہ جنوبی کوریا کے بحری جہازوں نے رواں مہینے میں تین بار شمالی کوریا کے سمندری حدود کی خلاف ورزی کی ہے اور پیونگ یانگ نے دھمکی دی ہے کہ جنوبی کوریا نے اگر پھر ایسا کوئی اقدام کیا تو اس کے بحری جہازوں کو نشانہ بنایا جائے گا- درایں اثنا جنوبی کوریا کی وزارت دفاع کے ترجمان نے پیونگ یانگ کی دھمکیوں پر افسوس ظاہر کرتے ہوئے بحیرہ اصفر کے مغربی علاقوں میں اس ملک کے بحری جہازوں کی کارروائیوں کو معمول کی بات قرار دیا ہے- جنوبی کوریا کے اس عہدیدار نے خبردار کرتے ہوئے کہا ہے کہ شمالی کوریا، سوچ سمجھ کر قدم اٹھائے تاکہ اسے منھ توڑ جواب کا سامنا نہ کرنا پڑے- واضح رہے کہ انیس سو ترپن میں شمالی و جنوبی کوریا کی جنگ بند ہونے کے بعد پیونگ یانگ اور سئول نے بارہا ایک دوسرے کو دھمکی دی ہے اور اس دوران بعض اقدامات کے نتیجے میں دونوں ملکوں کے کچھ فوجی ہلاک بھی ہوئے ہیں-


آپکی رائے



میرا تبصرہ ظاہر نہ کریں
تصویر امنیتی :
Monday - 2018 Dec 17