Tuesday - 2018 Sep 18
Languages
دوستوں کو بھیجیں
News ID : 81699
Published : 30/8/2015 12:26

پاکستان نے ایران سے گیس پائپ لائن منصوبے کو تیزی سے مکمل کر نے کا فیصلہ کرلیا ہے

پاکستان نے ایران سے پائپ گیس لائن منصوبے کو تیزی سے مکمل کر نے کا فیصلہ کرلیا ہے تہران میں پاکستان کے سفیر نور محمد جدمانی نے ایک انٹرویو میں کہا ہے کہ گیس پائپ لائن منصوبے پر چینی کمپنیوں سمیت دیگر بین الاقوامی اداروں سے رابطے شروع کر دیئے گئے ہیں، تاکہ اس منصوبے کے لیے سرمایہ کاری حاصل کی جاسکے۔انہوں نے کہا کہ چینی کمپنیاں نوابشاہ سے گوادر کی بندرگاہ تک گیس پائپ لائن منصوبے میں سرمایہ کاری پر تیار ہیں اور وہ اپنے تمام جائزے بھی مکمل کر چکی ہیں۔ انہوں نے بتایا کہ اس مرحلے میں کام دوسال میں مکمل ہوسکتا ہے اور اسے ایران میں پہلے سے بچھائی جانے والی پائپ لائن سے منسلک کیا جاسکتا ہے۔ 
نور محمد جدمانی نے کہا کہ پاکستان میں  گیس کی تلاش کے لیے ایران کے تجربے سے استفادہ کیا جاسکتا ہے۔ انہوں نے کہا کہ پاکستان کو توانائی کی ضرورت ہے اور وہ اس سلسلے میں ایران کی حمایت اور تعاون کو بڑی اہمیت دیتا ہے۔ 
تہران میں متعین پاکستانی سفیر نے بتایا کہ اس وقت ایران سے پچاس میگاواٹ بجلی حاصل کی جارہی ہے اور اسے سو سے ہزار میگاواٹ تک بڑھانے کے لیے بات چیت ہورہی ہے۔
 انہوں نے مزید کہا کہ باہمی تجارت بڑھانے کے لیے سرحد پر دو مزید پوائنٹ قائم کرنے پر غور کیا جارہا ہے اور دونوں ممالک کی قیادت سیاسی اور اقتصادی شعبوں میں تعلقات کے فروغ پر متفق ہے۔ 


آپکی رائے



میرا تبصرہ ظاہر نہ کریں
تصویر امنیتی :
Tuesday - 2018 Sep 18