Tuesday - 2018 April 24
Languages
دوستوں کو بھیجیں
News ID : 81874
Published : 1/9/2015 14:18

طالبان اور افغان حکومت کے درمیان اب براہ راست مذاکرات

افغان حکومت کے چیف ایگزیکٹو کے نائب ترجمان نے کہا ہے کہ اب حکومت اور طالبان کے درمیان مذاکرات، پاکستان کی ثالثی کے بغیر انجام پائیں گے-
تسنیم نیوز ایجنسی کی رپورٹ کے مطابق افغان حکومت کے چیف ایگزیکٹو کے نائب ترجمان جاوید فیصل نے پیر کو صحافیوں سے گفتگو کرتے ہوئے کہا کہ اسلام آباد سے تعلقات بہتر بنانے کے لئے کابل کی تمام کوششیں ناکام ہو گئی ہیں- جاوید فیصل نے کہا کہ طالبان کے ساتھ کابل کے امن مذاکرات افغان حکومت کی قیادت میں ہوں گے اور اس میں پاکستان کا کوئی کردار نہیں ہو گا- جاوید فیصل نے سفارتی طریقوں سے افغانستان اور پاکستان کے اختلافات حل کرنے کی کابل حکومت کی کوششوں پر تاکید کرتے ہوئے کہا ہے کہ کابل کو اسلام آباد سے توقع ہے کہ وہ دہشت گردی کے خلاف جنگ میں پوری صداقت اور سچائی سے افغانستان کا ساتھ دے گا- افغانستان کے چیف ایگزیکٹو کے نائب ترجمان نے کہا کہ اگر پاکستان، افغانستان کے سلسلے میں اپنے وعدے پر عمل نہیں کرے گا تو کابل حکومت بھی اسلام آباد کے سلسلے میں اپنی اسٹریٹیجی پر نظر ثانی کرے گی- دہشت گردی کے خلاف جنگ میں پاکستان کے مخلص نہ ہونے پر مبنی افغان حکومت کے حالیہ بیانات کے بعد کابل اور اسلام آباد کے تعلقات میں کشیدگی پیدا ہو گئی ہے-


آپکی رائے



میرا تبصرہ ظاہر نہ کریں
تصویر امنیتی :
Tuesday - 2018 April 24