Thursday - 2018 Nov 15
Languages
دوستوں کو بھیجیں
News ID : 83106
Published : 9/9/2015 19:54

افغانستان میں امریکی فوج مستقل طورپر رہنی چاہئے : امریکی اعلی عہدیدار

امریکی سینیٹ کی آرمڈ سروسز کمیٹی کے سربراہ میک تھارن بیری نے افغانستان میں امریکی فوج کی مستقل موجودگی پر تاکید کی ہے ۔ اطلاعات کے مطابق میک تھارن بیری نے سینیٹ کے اجلاس میں افغانستان میں امریکی فوج کی مستقل موجودگی پرتاکید کی - 

انہوں نے کہا کہ افغانستان سے امریکی فوج کی واپسی امریکی قومی سلامتی کے منافی ہے اوراس بارے میں امریکی حکام کو مزید توجہ دینے کی ضرورت ہے -
 میک تھارن بیری نے دعوی کیا کہ وائٹ ہاؤس ایک شیڈول کے مطابق افغانستان سے امریکی فوج کی واپسی کا ارادہ رکھتا ہے اور یہ امر علاقے میں عدم استحکام کا باعث بنے گا -
 میک تھارن بیری نے کہا کہ افغانستان میں ایک عشرے تک بھاری رقم خرچ کرنے کے بعد وہاں سے امریکی فوج کی واپسی کا امریکی حکام کا عمل احمقانہ ہے-
 بتایا جاتا ہے کہ اس وقت افغانستان میں امریکا کے نو ہزارآٹھ سو فوجی موجود ہیں -
کابل واشنگٹن معاہدے کی رو سے رواں عیسوی سال کے آغاز سے ہی امریکی فوجیوں کو افغانستان میں کسی بھی فوجی کارروائی میں شرکت نہیں کرنی تھی ، لیکن ایسا لگتا ہے کہ امریکی فوجیوں نے گزشتہ ماہ سے جنوبی افغانستان میں اپنی کارروائیاں پھرشروع کردی ہیں -
قابل ذکر ہے کہ افغانستان کی سینیٹ کے اراکین نے قومی اسمبلی کی طرف سے کابل واشنگٹن معاہدے کی توثیق کوتاریخی غلطی قراردیتے ہوئے اس پرنظرثانی کا مطالبہ کیا ہے-


آپکی رائے



میرا تبصرہ ظاہر نہ کریں
تصویر امنیتی :
Thursday - 2018 Nov 15