Thursday - 2018 Nov 15
Languages
دوستوں کو بھیجیں
News ID : 83132
Published : 10/9/2015 11:39

عراق میں ترکی کی فوج کے داخل ہونے کے خلاف ایران کا ردعمل

اسلامی جمہوریہ ایران کی وزارت خارجہ نے ترکی میں ہونے دہشت گردانہ حملے کی مذمت کرتے ہوئے دہشت گردوں کا تعاقب کرنے کے لیے ترکی کے فوجیوں کے عراق کی سر زمین میں داخل ہونے پر تنقید کی ہے- اسلامی جمہوریہ ایران کی وزارت خارجہ کے پریس آفس کی رپورٹ کے مطابق ایرانی وزارت خارجہ کی ترجمان مرضیہ افخم نے دہشت گردوں کے تعاقب کے لئے ترکی کے فوجیوں کے عراق میں داخلے کے خلاف اپنا رد عمل ظاہر کیا ہے۔ مرضیہ افخم نے کہا ہے کہ اسلامی جمہوریہ ایران کا موقف ہے کہ ممالک کی ارضی سالمیت اور ان کے اقتدار اعلی پر ضرب لگانے والا ہر اقدام خطے کے بحران کے پیچیدہ ہونے کا موجب بنے گا اور اس سے خطے میں اغیار کی مداخلت کا راستہ ہموار ہو گا۔ اسلامی جمہوریہ ایران کی وزارت خارجہ کی ترجمان نے دہشت گردوں کے حملے کی بھی مذمت کی جس میں ترکی کے متعدد فوجی اور عام شہری مارے گئے تھے۔ مرضیہ افخم نے اسلامی جمہوریہ ایران کی جانب سے ترکی کی حکومت اور اس ملک کے عوام کے ساتھ ہمدردی کا اظہار بھی کیا۔ اسلامی جمہوریہ ایران کی وزارت خارجہ کی ترجمان نے ترکی میں اس صورتحال کے جاری رہنے پر اپنی تشویش کا اظہار کیا اور امن مذاکرات کے از سر نو آغاز کی امید ظاہر کی۔ واضح رہے کہ ترکی کے فوجی منگل کے دن پی کے کے کے افراد سے مقابلے کے بہانے شمالی عراق میں داخل ہوئے۔


آپکی رائے



میرا تبصرہ ظاہر نہ کریں
تصویر امنیتی :
Thursday - 2018 Nov 15