پنج شنبه - 2019 مارس 21
ہندستان میں نمائندہ ولی فقیہ کا دفتر
Languages
Delicious facebook RSS ارسال به دوستان نسخه چاپی  ذخیره خروجی XML خروجی متنی خروجی PDF
کد خبر : 83650
تاریخ انتشار : 18/9/2015 20:23
تعداد بازدید : 10

صیہونی حکومت ایٹمی ہتھیاروں سے پاک مشرق وسطی کے قیام میں رکاوٹ

آئی اے ای اے میں اسلامی جمہوریہ ایران کے نمائندے رضا نجفی نے صیہونی حکومت کو ایٹمی ہتھیاروں سے پاک مشرق وسطی کے قیام میں سب سے بڑی رکاوٹ قرار دیا ہے۔
آئی اے ای اے، کی جنرل کانفرنس میں ایران کے نمائندے رضا نجفی نے جمعرات کو ایک بیان میں ایٹمی ہتھیاروں سے پاک مشرق وسطی کے قیام کی ایرانی تجویز کی منظوری کو چار عشروں سے زیادہ عرصہ گزرنے کی طرف اشارہ کرتے ہوئے کہا کہ اقوام متحدہ کی جنرل اسمبلی میں اس موضوع سے متعلق قراردادیں ہمیشہ رائے شماری کے بغیر پاس ہوئی ہیں اور یہ امر کشیدگی کا شکار علاقے مشرق وسطی میں اس اعلی مقصد کے حصول کی اہمیت کا غماز ہے-

انہوں نے کہا کہ اسلامی جہموریہ ایران نے این پی ٹی میں شمولیت حاصل کرکے اور اپنی پرامن ایٹمی تنصیبات آئی اے ای اے کے سیف گارڈز کے تحت لاکر ایٹمی ہتھیاروں کی مکمل نابودی کے لئے اپنے عزم محکم کو ثابت کیا ہے-

رضا نجفی نے مزید کہا کہ غاصب اسرائیلی حکومت نے اقوام متحدہ کی سلامتی کونسل کے بعض مستقل ارکان کی سیاسی و فوجی حمایت سے نہ تو این پی ٹی معاہدے پر دستخط کئے ہیں اور نہ ہی اس نے اپنی خقیہ ایٹمی تنصیبات پر آئی اے ای اے کے سیف گارڈز کی نگرانی کو قبول کیا ہے، بنا بریں اس غاصب حکومت کی غیر قانونی ایٹمی سرگرمیاں علاقائی امن اور سلامتی کے لئے سنگین خطرہ ہیں-


نظر شما



نمایش غیر عمومی
تصویر امنیتی :