Thursday - 2018 Oct. 18
Languages
دوستوں کو بھیجیں
News ID : 83810
Published : 21/9/2015 9:58

بحران یمن کا سیاسی حل چاہتے ہیں، ملکی خود مختاری کا سودا نہیں کریں گے :الحوثی

تحریک انصار اللہ یمن کے سربراہ نے اس ملک کے عوامی انقلاب کو یمن میں خودمختاری اور حاکمیت کے فقدان اور سامراجی طاقتوں اور جارحین کے لالچ کا نتیجہ قرار دیا ہے- المسیرہ ٹی وی کی رپورٹ کے مطابق سید عبدالملک بدرالدین الحوثی نے انقلاب یمن کی سالگرہ کی مناسبت سے ایک تقریر میں کہا کہ انقلاب میں یمنی عوام کی کامیابی، آزادی و خودمختاری اور باعزت زندگی پر مبنی بہتر مستقبل کی جانب ایک اہم قدم شمار ہوتی ہے اور یہ عظیم تحریک ملت یمن کے تمام برحق اور منصفانہ مطالبات پورے ہونے تک جاری رہے گی-
انھوں نے کہا کہ ملت یمن کے تمام طبقے اس عوامی انقلاب میں شریک ہیں- ان کا کہنا تھا کہ آزادی و خودمختاری حاصل کرنے پر یمنی عوام کے اصرار اور تاکید کی وجہ سے امریکہ، اسرائیل اور آل سعود حکومت جیسی سامراجی اور جارح طاقتوں اور علاقے میں ان کے پٹھوؤں اور اسی طرح ان کے داخلی آلہ کاروں نے یمنی عوام کو نشانہ بنایا ہے- 
تحریک انصار اللہ یمن کے سربراہ نے مزید کہا کہ سعودی حکومت نے علاقے میں جنگ کا راستہ ہموار کیا ہے اور سب سے پہلے اسرائیل اس سے فائدہ اٹھا رہا ہے- انھوں نے اس بات پر زور دیا کہ ہم سیاسی راہ حل کے لیے اپنی آمادگی کا اعلان کرتے ہیں لیکن شرط یہ ہے کہ وہ ملک کی آزادی و خود مختاری اور عزت و وقار اور اسی طرح انقلاب کے اہداف و مقاصد کے منافی نہ ہو-


آپکی رائے



میرا تبصرہ ظاہر نہ کریں
تصویر امنیتی :
Thursday - 2018 Oct. 18