Saturday - 2018 july 21
Languages
دوستوں کو بھیجیں
News ID : 85544
Published : 18/10/2015 11:8

یمن پر سعودی جارحیت، ایک ہی خاندان کے 10 افراد شہید

یمن پر سعودی اتحاد کے وحشیانہ حملوں میں ایک ہی خاندان کے دس افراد شہید ہوگئے ہیں۔

فارس نیوز کے مطابق سعودی عرب اور اس کے اتحادیوں کے لڑاکا طیاروں نے ایک بار پھر تعز شہر میں رہائشی علاقے میں ایک مکان کو اپنے وحشیانہ حملوں کا نشانہ بنایا ہے۔ 
اس حملے میں عورتوں اور بچوں سمیت ایک ہی خاندان کے دس افراد شہید اور متعدد زخمی ہوگئے۔ یمن کے رہائشی علاقوں پر سات ماہ سے جاری سعودی بمباری میں میں کم سے کم چھے ہزار یمنی شہری شہید ہوچکے ہیں۔ 

دوسری جانب یمنی فوج اور عوامی رضاکار فورس نے سعودی جارحیت کا جواب دیتے ہوئے جنوبی سعودی عرب میں ایک فوجی اڈے کو اپنے حملوں کا نشانہ بنایا ہے۔ 

یمنی فوج کے ترجمان بریگیڈیئر شرف غالب لقمان نے بتایا ہے کہ جمعے کے روز جنوبی سعودی عرب کے صوبے عسیر کے علاقے ظہران میں واقع العش نامی سعودی فوجی اڈے پر کئے جانے والے حملے میں درجنوں سعودی فوجی ہلاک اور زخمی ہوئے ہیں جبکہ اسلحے کا ایک گودام بھی تباہ ہوگیا ہے۔ جمعرات کو بھی یمنی فوج نے سعودی عرب کے "خمیس مشیط" میں واقع فوجی اڈے پر میزائل داغے تھے جس کے نتیجے میں اس اڈے میں تعینات دو اعلی فوجی افسران چھیاسٹھ نچلے درجے کے افسران اور تراسی دیگر کارکن ہلاک ہوگئے تھے۔

ایک اور اطلاع کے مطابق یمن میں سعودی اتحاد کی پے درپے ناکامیوں کے بعد، شام سے دہشت گردوں کو لے کر، ترکی ، قطر، متحدہ عرب امارات اور سعودی عرب کے ہوائی جہاز، جنوبی یمن کے شہر عدن کے ہوائی اڈے پر اترے ہیں۔ سعودی اتحاد میں شامل ممالک یمن میں اپنے مذموم مقاصد کے حصول کے لئے دہشت گردوں کے استمعال کرتے چلے آرہے ہیں۔


آپکی رائے



میرا تبصرہ ظاہر نہ کریں
تصویر امنیتی :
Saturday - 2018 july 21