Monday - 2018 Dec 17
Languages
دوستوں کو بھیجیں
News ID : 85605
Published : 19/10/2015 6:45

سیکورٹی اہلکاروں کے ہاتھوں عزاداری کی پرچموں کی بے حرمتی کے خلاف بحرینی عوام کا احتجاج

بحرینی عوام نے محرم الحرام کے دوران عزاداری سید الشہدا پر روک لگانے سے متعلق شاہی حکومت اقدامات کے خلاف مظاہرہ کیا ہے۔ بحرینی عوام نے منامہ میں عزاداران حسینی پر شاہی حکومت کے کارندوں کے حملوں کی مذمت میں اس شہرمیں بڑا مظاہرہ کیا اور آل خلیفہ حکومت کی تفریق آمیزپالیسیوں کی مذمت کی - بحرینی مظاہرین کا کہنا تھا کہ وہ آل خلیفہ حکومت کے اقدامات کے مقابلے میں ہرگز خاموش نہیں بیٹھیں گےاور پورے جوش وخروش اور پوری طاقت وتوانائی کے ساتھ امام حسین علیہ السلام کی عزاداری برپا کریں گے - واضح رہے کہ آل خلیفہ حکومت کے کارندے ہرسال محرم کے ایام میں عزاداری سے متعلق بینر، پرچم اورعزاداری کے لئے تیارکئے گئے شامیانوں اور قناتوں کو ہٹادیتے ہیں اور شہریوں کو امام حسین کی عزاداری نہیں کرنے دیتے - واضح رہے کہ سن دوہزار گیارہ سے سعودی عرب اور متحدہ عرب امارات کے بھی فوجی بحرینی سیکورٹی اہلکاروں کے ساتھ مل کر بحرینی عوام کی پرامن تحریک کو کچل رہے ہیں - دوسری جانب بحرین کی سب سے بڑی اپوزیشن جماعت جمعیت الوفاق نے کہا ہے کہ گذشتہ اپریل سے ستمبر تک کےعرصے میں بحرینی حکومت نے بڑے پیمانے پر انسانی حقوق اورمختلف قسم کی آزادیوں کی خلاف ورزی کی ہے - جمعیت الوفاق کے انسانی حقوق سے متعلق شعبے کے سربراہ سید ہادی موسوی نے ایک پریس کانفرنس میں کہا ہے کہ گذشتہ اپریل سے ستمبر کے دوران شاہی حکومت نے ایک سو اٹھاسی قیدیوں کو ایذائیں پہنچائی ہیں جبکہ بائیس قیدیوں کو دواؤں سے بھی محروم رکھا ہے - جمعیت الوفاق کا کہنا ہے کہ اڑتیس سیاسی قیدی ایسےہیں جن کے بارے میں کچھ بھی معلوم نہیں ہے کہ وہ کہاں اور کس حال میں ہیں - بحرین کے مخالف سیاسی رہنما ہادی موسوی کا کہنا تھا کہ رواں سال اپریل سے ستمبرتک سیکورٹی فورس کے اہلکاروں نے سات سو انہتر شہریوں کو گرفتار کیا ہےجن میں اٹھ خواتین اور ایک سوبائیس بچے شامل ہیں - ان کا کہنا تھا اس عرصے میں بحرین کی شاہی حکومت نے بہت سے سیاسی اور مذہبی رہنماؤں کی سرگرمیوں پرپابندی عا‏ئد کردی ہے -


آپکی رائے



میرا تبصرہ ظاہر نہ کریں
تصویر امنیتی :
Monday - 2018 Dec 17