سه شنبه - 2019 مارس 19
ہندستان میں نمائندہ ولی فقیہ کا دفتر
Languages
Delicious facebook RSS ارسال به دوستان نسخه چاپی  ذخیره خروجی XML خروجی متنی خروجی PDF
کد خبر : 86686
تاریخ انتشار : 6/11/2015 18:43
تعداد بازدید : 6

بحران شام کے بارے میں ایران اور روس کے نائب وزرائے خارجہ کی مشاورت

اسلامی جمہوریہ ایران اور روس کے نائب وزرائے خارجہ نے بحران شام کی تازہ ترین صورتحال پر تبادلۂ خیال کیا ہے۔

ہمارے نمائندے کی رپورٹ کے مطابق اسلامی جمہوریہ ایران کے نائب وزیر خارجہ حسین امیر عبداللہیان اور روس کے نائب وزیر خارجہ میخائیل بوگدانوف نے جمعرات کے دن سہ پہر کے وقت ٹیلی فونی گفتگو میں شام سے متعلق ویانا اجلاس کے نتائج اور یمن کی صورتحال پر مشاورت کی۔

ایران کے نائب وزیر خارجہ حسین امیر عبداللہیان نے روس کے نائب وزیر خارجہ میخائیل بوگدانوف کو شام کے نائب وزیر خارجہ فیصل مقداد کے ساتھ تہران میں ہونے والی ملاقات اور مذاکرات سے آگاہ کیا اور کہا کہ دمشق دہشت گردی کے سنجیدہ مقابلے کی ضرورت پر تاکید کرتے ہوئے عوامی ووٹوں پر مبنی سیاسی عمل کا خیر مقدم اور اس کی حمایت کرتا ہے۔

اسلامی جمہوریہ ایران کے نائب وزیر خارجہ نے مزید کہا کہ شام اس بات کی توقع رکھتا ہے کہ اس ملک کے بحران کے ہر طرح کے سیاسی حل میں دوسرے ممالک خصوصا ہمسایہ ممالک کو اقوام متحدہ کی سلامتی کونسل کی دہشت گردی مخالف قراردادوں پر عملدرآمد کا پابند بنایا جائے ۔

روسی نائب وزیر خارجہ نے بھی اس گفتگو میں شام سے متعلق ویانا میں ہونے والے اگلے اجلاس میں اسلامی جمہوریہ ایران کی شرکت پر تاکید کی اور شام کے بحران کے حل میں ایران کے کردار کو بنیادی قرار دیا۔

اسلامی جمہوریہ ایران اور روس کے نائب وزرائے خارجہ نے اس ٹیلی فونی گفتگو میں یمن کے بارے میں بھی مشاورت کی اور اس ملک میں جنگ بندی اور سیاسی مذاکرات کے از سر نو آغاز کی ضرورت پر تاکید کی۔

حسین امیر عبداللہیان نے کہا کہ تہران بحران یمن کے سیاسی حل کی حمایت کرتا ہے اور اس بات پر زور دیتا ہے کہ یمن میں کسی کو فوجی فتح حاصل نہیں ہوگی۔


نظر شما



نمایش غیر عمومی
تصویر امنیتی :