Monday - 2018 Oct. 22
Languages
دوستوں کو بھیجیں
News ID : 88231
Published : 27/11/2015 17:55

تہران کے خطیب جمعہ کی عالمی سامراجی طاقتوں اور دشمنوں کی سازشوں کے مقابلے میں ہوشیار رہنے پر تاکید

تہران کے خطیب جمعہ نے عالمی سامراجی طاقتوں اور دشمنوں کی سازشوں کے مقابلے میں ہوشیار رہنے کی ضرورت پر زور دیا ہے۔ تہران یونیورسٹی میں نماز جمعہ کے خطبات میں آیت اللہ موحدی کرمانی نے کہا کہ دشمن کے اثر و رسوخ کے مقابلے میں ، عوام اور حکام دونوں کو پوری طرح ہوشیار رہنے کی ضرورت ہے۔ انہوں نے کہا کہ امریکہ ، صیہونیوں کے ذریعے ایران میں اقتصادی، ثقافتی، سیاسی اور سیکورٹی اثر و رسوخ بڑھانے کی کوشش کر رہا ہے۔ تہران کے خطیب جمعہ آیت اللہ موحدی کرمانی نے اس بات کی جانب بھی اشارہ کیا کہ بعض یورپی وفود اقتصادی معاملات کے بہانے ایران کے سیکورٹی اور دفاعی معاملات میں اثر و رسوخ پیدا کرنا چاہتے ہیں۔ آیت اللہ موحدی کرمانی نے تہران میں گیس برآمد کر نے والے ملکوں کے سربراہی اجلاس کا ذکر کرتے ہوئے کہا کہ ، اس اجلاس کا سب سے اہم پہلو یہ رہا کہ مختلف ملکوں کے سربراہوں کو رہبر انقلاب اسلامی سے ملاقات اور علاقائی و عالمی مسائل کے بارے میں ایران کے موقف کو جاننے کا موقع ملا ہے۔ تہران کے خطیب جمعہ نے خطے میں امریکہ اور سعودی عرب کے جرائم کا ذکر کرتے ہوئے کہا کہ ایران خطے کی مشکلات کو تشدد سے دور رہ کر سیاسی طریقے سے حل کیے جانے کا خواہاں ہے۔ شام کی صورتحا ل پر روشنی ڈالتے ہوئے آیت اللہ موحدی کرمانی نے کہا کہ دہشت گردوں کو تدریجی شکست کا سامنا ہے اور شام کی صورتحا ل رفتہ رفتہ بہتر ہوتی جا رہی ہے۔ انہوں نے کہا کہ صورتحال کی بہتری کے نتیجے میں ایک ملین افراد اپنے گھروں کو واپس لوٹ گئے ہیں۔ تہران کے خطیب جمعہ نے ماسکو اور انقرہ کے درمیان پیدا ہونے والی کشیدگی کی جانب اشارہ کرتے ہوئے کہا کہ دونوں ملکوں کو اس معاملے میں صبر و تحمل سے کام لینا چاہیے۔ آیت اللہ موحدی کرمانی نے چہلم امام حسین علیہ السلام میں لاکھوں ایرانیوں کی شرکت کی جانب اشارہ کرتے ہوئے کہا کہ خطرات کے باوجود لاکھوں کی تعداد میں زائرین کی کربلا روانگی، اہلبیت رسول کے ساتھ مسلمانوں کے قلبی لگاؤ اور عشق کی علامت ہے۔


آپکی رائے



میرا تبصرہ ظاہر نہ کریں
تصویر امنیتی :
Monday - 2018 Oct. 22