Tuesday - 2018 Oct. 23
Languages
دوستوں کو بھیجیں
News ID : 88441
Published : 30/11/2015 16:16

رہبر انقلاب اسلامی کے مشیر نے شام کے صدر بشار اسد سے ملاقات کی

ایران کی تشخیص مصلحت نظام کونسل کے اسٹریٹیجک ریسرچ سینٹر کے سربراہ اور سابق وزیرخارجہ ڈاکٹر علی اکبر ولائتی نے دمشق میں شام کے صدر بشار اسد سے ملاقات اور گفتگو کی ۔

دمشق سے ہمارے نمائندے کے مطابق ڈاکٹرعلی اکبر ولائتی اور صدر بشاراسد کے درمیان ملاقات میں بحران شام کے حل کے بارے میں تبادلہ خیال کیا گیا۔ شام کے صدر بشار اسد نے اس ملاقات میں اپنے ملک کی حمایت کرنے پر رہبر انقلاب اسلامی کے مدبرانہ موقف کی قدردانی کی۔ انہوں نے کہا کہ تکفیری دہشت گردوں کے خلاف شامی فوج اورعوامی رضاکار فورس کی حالیہ کامیابیاں، ایران اور روس جیسے دوست اور اتحادی ملکوں کی حمایت کی وجہ سے حاصل ہوئی ہیں۔

صدر بشار اسد اور ڈاکٹر علی اکبر ولائتی نے اس ملاقات میں مغرب کی سازشوں کے مقابلے میں دمشق اور تہران کے درمیان اسٹریٹیجک تعلقات کی اہمیت پر زور دیا۔ قبل ازیں دمشق ایئر پورٹ پر صحافیوں سے بات چیت کرتے ہوئے ایران کے اسٹریٹیجک ریسرچ سینٹر کے سربراہ علی اکبر ولائتی نے کہا کہ تہران پوری قوت کے ساتھ شامی حکومت اورعوام کے ساتھ کھڑا ہے ۔ انہوں نے کہا کہ ایران، شام کی خودمختاری اورارضی سالمیت کے دفاع میں شامی عوام کی حمایت جاری رکھے گا۔

ایران کی تشخیص مصلحت نظام کونسل کے اسٹریٹیجک ریسرچ سینٹر کے سربراہ، اتوار کی صبح ایک اعلی سطحی وفد کے ہمراہ شام پہنچے ، وہ پیرکے روز شام سے لبنان جانے کا ارادہ رکھتے ہیں۔

ایران کے نائب وزیر خارجہ حسین امیرعبداللھیان بھی اس دورے میں ڈاکٹر علی اکبر ولائتی کےساتھ ہیں۔


آپکی رائے



میرا تبصرہ ظاہر نہ کریں
تصویر امنیتی :
Tuesday - 2018 Oct. 23