Saturday - 2018 Dec 15
Languages
دوستوں کو بھیجیں
News ID : 88771
Published : 6/12/2015 17:40

آمانو کی رپورٹ کے تعلق سے ایران اپنا مکمل موقف پیش کرے گا

ایران نے کہا ہے کہ وہ آئی اے ای اے کے ڈائریکٹر جنرل کی رپورٹ کے بارے میں اپنا مکمل موقف جلد ہی تحریری شکل میں پیش کرے گا جوہری توانائی کے عالمی ادارے آئی اے ای میں ایران کے مستقل نمائندے محمد رضا نجفی نے کہا ہے کہ ایران کی ایٹمی سرگرمیوں کے تعلق سے پی ایم ڈی کے بارے میں یوکیا آمانو کی رپورٹ میں بعض منفی نکات بھی پائے جاتے ہیں جنہیں تہران مسترد کرتا ہے۔

انہوں نے کہا کہ اگرچہ اس رپورٹ میں مجموعی طور پر ایران کی ایٹمی سرگرمیوں میں انحراف نہ ہونے بات کی گئی ہے اور اس رپورٹ نےگذشتہ بارہ برسوں سے ایران کے خلاف کئے جانےوالے جھوٹے دعوؤں پر خط بطلان کھینچ دیا ہے تاہم اس رپورٹ کے بعض حصوں میں جو کم اہمیت دعوے کیے گئے ہیں ایران انہیں بھی تسلیم نہیں کرتا۔ محمد رضا نجفی نے واضح کیا کہ اسلامی جمہوریہ ایران آئی اے ای اے کی رپورٹ کا بغور جائزہ لے رہا ہے اور اس بارے میں روڈمیپ کی شق نمبر نو کے مطابق جلد اپنے موقف کا تحریری شکل میں اعلان کرے گا۔

تاہم انہوں نے کہا کہ اس وقت ہماری ساری توجہ پانچ جمع ایک گروپ کی قرارداد اور بورڈ آف گورنرز میں ایران کے ایٹمی معاملے پر کھڑے کئے گئے تنازعے کو ہمیشہ کے لئے ختم کرنے پر مرکوز ہے۔ قابل ذکر ہے کہ آئی اے ای اے کے ڈائریکٹرجنرل یوکیا آمانو نے بدھ دو دسمبر کو ایران کی ایٹمی سرگرمیوں میں فوجی مقاصد کی جانب ممکنہ انحراف یا پی ایم ڈی کے بارے میں ایک رپورٹ ادارے کے بورڈ آف گونرز کے ارکان کو پیش کی ہے۔ 

اس رپورٹ میں کہا گیا ہے کہ دوہزار نو کے بعد ایران کی ایٹمی سرگرمیوں میں کسی بھی مشکوک اقدام کا مشاہدہ نہیں کیا گیا۔آئی اے ای اے کا بورڈ آف گورنرز پندرہ دسمبر کو اس رپورٹ کا جائزہ لے گا۔


آپکی رائے



میرا تبصرہ ظاہر نہ کریں
تصویر امنیتی :
Saturday - 2018 Dec 15