Thursday - 2018 Nov 15
Languages
دوستوں کو بھیجیں
News ID : 89535
Published : 18/12/2015 17:31

ایران کی پر امن ایٹمی سرگرمیوں کے خلاف بارہ سال تک جھوٹا پروپیگنڈہ کیا گیا: سید احمد خاتمی

تہران کی مرکزی نماز جمعہ کے خطیب نے کہا ہے کہ آئی اے ای اے میں ایران کے خلاف جعلی کیس کا خاتمہ اس بات کا ثبوت ہے کہ ایران کی پرامن ایٹمی سرگرمیوں کے خلاف بارہ سال تک جھوٹا پروپیگنڈہ کیا گیا۔

تہران کی مرکزی نماز جمعہ کے خطیب آیت اللہ سید احمد خاتمی نے اپنے خطبوں میں کہا ہے کہ ایٹمی توانائی کی عالمی ایجنسی آئی اے ای اے میں ایران کے خلاف پی ایم ڈی ختم کر کے ایران پر احسان نہیں کیا گیا ہے بلکہ اپنے بارہ سال کے جھوٹ کا اعتراف کیا گیا ہے۔ انھوں نے اسی کے ساتھ ایٹمی معاہدے کے تحت مشترکہ جامع ایکشن پلان پر عمل درآمد کی نگرانی کرنے والوں کو خبردار کیا کہ ہوشیار ی کے ساتھ اس بات پر نظر رکھیں کہ مقابل فریق پوری طرح مشترکہ ایکشن پلان پر عمل کر رہے ہیں یا نہیں۔

انھوں نے اسی کے ساتھ کہا کہ آئی اے ای اے میں ایران کے خلاف جعلی کیس کا خاتمہ رہبر انقلاب اسلامی آیت اللہ العظمی سید علی خامنہ ای کی رہنمائیوں اور ایرانی عوام کی استقامت و پائیداری کا نتیجہ ہے۔ آیت اللہ سید احمد خاتمی نے نائیجیریا میں فوج کے ہاتھوں شیعہ مسلمانوں کے قتل عام کی مذمت کرتے ہوئے نائیجیریا کی حکومت اور فوج کو اس شرمناک اقدام کے نتائج کی جانب سے خبردار کیا۔ انھوں نے شیعہ مسلمانوں کے قتل عام اور آیت اللہ زکزکی کی گرفتاری پر نائیجیریا کی حکومت کو سعودی حکومت کی جانب سے مبارکباد دیئے جانے کو افسوسناک قرار دیتے ہوئے کہا کہ یہ وحشیانہ قتل عام صیہونی حکومت، وہابیوں اور دہشت گرد گروہوں ، داعش اور بوکوحرام کے کہنے پر کیا گیا ہے ۔

تہران کی مرکزی نماز جمعہ کے خطیب نے نائیجیریا کی حکومت سے اس قتل عام کے ذمہ داروں کو جلد از جلد ‎سزا دینے اور مستقبل میں اس قسم کے واقعات کی روک تھام کے لئے ضروری اقدامات کرنے کا مطالبہ کیا۔

آیت اللہ سید احمد خاتمی نے آخر میں سعودی حکومت کی جانب سے داعش اور دہشت گردی کے خلاف نام نہاد اتحاد بنائے جانے کے اعلان کی طرف اشارہ کرتے ہوئے کہا کہ سعودی حکومت ایسی حالت میں داعش سے مقابلے کی دعویدار ہے کہ جب اس نے خود داعش کو تشکیل دیا، اس کے دہشت گردوں کو ٹریننگ دی اور اب بھی اس دہشت گرد گروہ کی مالی اور فوجی حمایت کر رہی ہے۔


آپکی رائے



میرا تبصرہ ظاہر نہ کریں
تصویر امنیتی :
Thursday - 2018 Nov 15