Monday - 2018 June 25
Languages
دوستوں کو بھیجیں
News ID : 90272
Published : 29/12/2015 18:19

شام میں اب روسی روبوٹ بھی دہشت گردوں کے خلاف لڑیں گے

روس نے اپنے جنگی روبوٹ شام میں دہشت گردوں کے خلاف جنگ کے لئے بھیج دیئے ہیں۔

عرب میڈیاکی رپورٹوں کے مطابق شامی فوج نے ابھی حال ہی میں روس کے ان جنگی روبوٹوں کے استعمال کی ٹریننگ بھی حاصل کرلی ہے - خبروں میں بتایا گیا ہے کہ ان جنگی روبوٹوں کوشام کے شہر لاذقیہ کے مضافات میں سب سے پہلے استعمال کیا جائے گا

روس کی مسلح افواج کے سربراہ والری گیراسیموف نے کہا ہے کہ یہ جنگی روبوٹ جلد ہی میدان جنگ میں اپنی کارروائیاں شروع کردیں گے اور یہ جنگ پوری طرح روبوٹک ہوگی -

روسی ذرائع کا کہنا ہے کہ یہ روبوٹ مختلف قسم کے ہیں جن میں پلیٹ فارم -ایم اور آرگوقسم کے روبوٹ بھی شامل ہیں - متحرک اور ثابت اہداف اور ٹھکانوں کا پتہ لگاکر انہیں نابود کرنا اور اسٹریٹیجک تنصیبات کی حفاظت کرنا پلیٹ فارم ایم روبوٹ کی خصوصیات ہیں 

یہ روبوٹ رات کی تاریکی میں بھی اپنی کارروائیاں انجام دینے کی صلاحیت رکھتاہے - جبکہ یہ ربورٹ فائرنگ کرنے، گرینیڈ فائرکرنے اور ٹینک شکن میزائل داغنے کی بھی صلاحیت رکھتا ہے -

یہ روبوٹ ریڈار سسٹم ، فاصلے کا اندازہ کرنے کے آلات اور ویڈیوکیمرے نیز بارودی سرنگیں بچھانے والے آلات سے بھی لیس ہے۔ روس کے تیار کردہ آرگو روبوٹ کی خصوصیت یہ بھی ہے کہ یہ دشمن کے ٹھکانوں پر تیز رفتار حملہ کرنے، ان کے ٹھکانوں کو پوری طرح تباہ کرنے اور اونچے مقامات پر بھی تعینات ہونے کی صلاحیت رکھتاہے - یہ روبوٹ، کہ جس کا وزن ایک ٹن اور لمبائی تین اعشاریہ چار میٹر اور چوڑائی ایک اعشاریہ آٹھ پانچ میٹر ہے، کلاشنکوف اور راکٹ لانچر سے بھی لیس ہے اور بیس گھنٹے تک مسلسل جنگی کارروائیاں انجام دے سکتاہے -


آپکی رائے



میرا تبصرہ ظاہر نہ کریں
تصویر امنیتی :
Monday - 2018 June 25