Friday - 2018 Oct. 19
Languages
دوستوں کو بھیجیں
News ID : 90371
Published : 31/12/2015 15:5

یمن میں سعودی جارحیت جاری ہے

سعودی عرب کے لڑاکا طیاروں نے یمن کے مختلف علاقوں پر وحشیانہ بمباری کی ہے-

المسیرہ ٹی وی کی رپورٹ کے مطابق سعودی عرب کے لڑاکا طیاروں نے جمعرات کو صنعا میں یمن کے بین الاقوامی ہوائی اڈے اور صوبہ صعدہ میں الدیلمی ہوائی اڈے پر کئی بار بمباری کی- اس بمباری میں ہونے والے جانی اور مالی نقصانات کے بارے میں ابھی تک کوئی رپورٹ نہیں ملی ہے-

یمنی فوج نے بھی سعودی جارحیت کےجواب میں جنوبی سعودی عرب میں عسیر کے ابھاء ہوائی اڈے پر ایک میزائل فائر کیا ہے-

درایں اثنا نامعلوم افراد نے بدھ کی رات یمن کے مفرور و معزول صدر منصور ہادی کے کمانڈر احمد الادریسی کی گاڑی پر فائرنگ کی جس کے نتیجے میں وہ ہلاک ہو گئے-

یمنی ذرائع ابلاغ کے مطابق صوبہ تعز میں العمری کے علاقے میں یمن کی فوج اور عوامی رضاکار فورس کے میزائلی حملے میں جارح اتحاد کے متعدد ایجنٹ اور سوڈان کے انیس فوجی ہلاک ہوگئے-

صوبہ مارب میں بھی یمنی فوج نے شہر مجزر میں مفرور صدر منصور ہادی کے فوجیوں کے اکٹھا ہونے کے مقام پر کئی میزائل برسائے ہیں- اسی طرح کئی سعودی جارحین جعدر کے علاقے میں ہونے والی جھڑپوں میں ہلاک ہوگئے-

ایک اور رپورٹ کے مطابق صوبہ عدن میں یمن کی اصلاح پارٹی کے دفتر میں بھی دھماکا ہوا ہے اور اس کے اطراف میں جھڑپیں ہوئی ہیں-

سعودی عرب نے امریکہ اور بعض عرب ممالک کی مدد سے چھبیس مارچ دوہزار پندرہ سے یمن پر وحشیانہ حملے شروع کر رکھے ہیں- ان حملوں کا مقصد یمن کے مستعفی و مفرور صدر منصور ہادی کو اقتدار میں واپس لانا اور انقلابیوں کو اقتدار سے دور رکھنا ہے جو ملک میں امن و استحکام چاہتے ہیں اور اس وقت بھی شہروں میں سیکورٹی کی ذمہ داری سنبھالے ہوئے ہیں- یمن پر سعودی عرب اور اس کے اتحادیوں کے جارحانہ حملوں کے نتیجے میں اس ملک کی اکثر بنیادی تنصیبات ، اسپتال ، اسکول اور مکانات تباہ ہو چکے ہیں سعودی حملوں کے نتیجے میں عورتوں اور بچوں سمیت ہزاروں بے گناہ یمنی شہری شہید اور دربدر ہو گئے ہیں-


آپکی رائے



میرا تبصرہ ظاہر نہ کریں
تصویر امنیتی :
Friday - 2018 Oct. 19