Saturday - 2018 Sep 22
Languages
دوستوں کو بھیجیں
News ID : 90717
Published : 5/1/2016 13:39

ایران سے سفارتی تعلقات ختم کر کے سعودی عرب نے خود اپنا نقصان کیا ہے: ایران کے نائب صدر

اسلامی جمہوریہ ایران کے سینئر نائب صدر نے کہا ہے ایران سے سفارتی تعلقات ختم کر کے سعودی عرب نے خود اپنا نقصان کیا ہے۔

ایران کے سینئر نائب صدر اسحاق جہانگیری نے سفارتی تعلقات کو ختم کرنے کے سعودی حکومت کے اقدام کے ردعمل میں کہا کہ ایران ایک بڑا اور مقتدر ملک ہے اس لئے اس سے احترام سے بات کرنے کی ضرورت ہے اور تعلقات ختم کر کے سعودی عرب نے خود اپنا نقصان کیا ہے - ایران کے نائب صدر اسحاق جہانگیری نے سعودی حکمرانوں کو مخاطب کرتے ہوئے کہا کہ تم لوگ غیر منطقی عجلت پسندی پر مبنی اقدامات سے باز آ جاؤ -

انہوں نے اس بات کا ذکر کرتے ہوئے کہ ایران کی تاریخ و تمدن علاقے کے ملکوں کو اچھی طرح معلوم ہے، کہا ہم سعودی حکمرانوں کو نصیحت کرتے ہیں کہ وہ تخریبی اور درایت اور بصیرت سے عاری اقدامات سے باز آ جائیں- انہوں نے کہا کہ اگر ایک بڑا ملک صبر و تحمل سے کام لیتا ہے، تو تم کو بھی اس سے سیکھنا چاہئے-

انہوں نے علاقے میں سعودی عرب کے اقدامات کا حوالہ دیتے ہوئے سعودی حکمرانوں سے سوال کیا کہ تم لوگوں کے ذریعے دہشت گرد گروہوں کی تشکیل کا نتیجہ، کیا علاقے میں بدامنی کے سوا اور کچھ نکلا ہے؟ یمن پر تمہارے وحشیانہ حملوں سے مسلمانوں کا خون بہنے اور اس ملک کی تباہی کے علاوہ کیا اور بھی کوئی نتیجہ برآمد ہوا ہے؟ انہوں نے سعودی حکمرانوں سے سوال کیا کہ شام اور عراق میں تمہارے تیارکردہ دہشت گردوں کے ہاتھوں عوام کے قتل عام کا تمہیں کیا فائدہ ہوا ہے؟ اس درمیان رویٹرز نے خبر دی ہے کہ ایران کے ساتھ تعلقات کو ختم کرنے کے اعلان کے فورا بعد بازار حصص میں سعودی عرب کے حصص کی قیمتیں سات فیصد تک کم ہو گئیں۔


آپکی رائے



میرا تبصرہ ظاہر نہ کریں
تصویر امنیتی :
Saturday - 2018 Sep 22