سه شنبه - 2019 مارس 26
ہندستان میں نمائندہ ولی فقیہ کا دفتر
Languages
Delicious facebook RSS ارسال به دوستان نسخه چاپی  ذخیره خروجی XML خروجی متنی خروجی PDF
کد خبر : 91176
تاریخ انتشار : 11/1/2016 15:40
تعداد بازدید : 2

سعودی عرب کی پالیسی خطے میں فرقہ واریت میں شدت پیدا کرنے سے عبارت ہے: محمد جواد ظریف

اسلامی جمہوریہ ایران کے وزیر خارجہ محمد جواد ظریف نے کہا ہےکہ سعودی عرب کی پالیسی ایران اور گروپ پانچ جمع ایک کے ایٹمی معاہدے کو نقصان پہنچانے اور خطے میں فرقہ وارانہ کشیدگی میں شدت پیدا کرنے سے عبارت ہے۔

محمد جواد ظریف نے امریکہ سے شائع ہونے والے اخبار نیویارک ٹائمز میں لکھا ہے کہ یہ بات باعث افسوس ہے کہ بعض ممالک دنیا کے ساتھ ایران کے اشتراک عمل کی راہ میں رکاوٹیں کھڑی کر رہے ہیں اور سعودی عرب نے نومبر دو ہزار تیرہ میں ہونے والے عارضی ایٹمی معاہدے کے بعد اس معاہدے کو ناکامی سے دوچار کرنے کے لئے اپنے تمام تر وسائل استعمال کئے۔ اسلامی جمہوریہ ایران کے وزیر خارجہ نے مزید لکھا ہے کہ آج بھی سعودی عرب کے بعض حکام حالات معمول پر آنے کی راہ میں رکاوٹیں ڈال رہے ہیں بلکہ وہ سارے خطے کو جنگ کی آگ میں دھکیلنے کے درپے ہیں۔

محمد جواد ظریف نے مزید لکھا ہے کہ سعودی عرب میں بربریت پوری طرح عیاں ہے۔ اس ملک میں ایک ہی دن میں سینتالیس افراد کے سرقلم کر دیے گئے۔ ان افراد میں معروف عالم دین آیت اللہ باقر النمر بھی شامل تھے جنہوں نے اپنی ساری زندگی تشدد کےمقابلے اور شہری حقوق کے دفاع کے لئے وقف کر دی تھی۔


نظر شما



نمایش غیر عمومی
تصویر امنیتی :