Saturday - 2018 Nov 17
Languages
دوستوں کو بھیجیں
News ID : 183669
Published : 6/10/2016 11:2

عراق میں عاشورا کی تیاریاں عروج پر،زائرین کا امڑا سیلاب

محرم کے مہینے میں جہاں عراق کے مختلف علاقوں میں خصوصی سیکورٹی، صحت اور مختلف قسم کی خدمات کے مراکز لگانے کا سلسلہ جاری ہے وہیں پوری دنیا سے زائرین نے عراق کی جانب رخ کر دیا ہے۔


ولایت پورٹل:
العالم کی رپورٹ کے مطابق،عراق  کے السومریة نیٹ ورک نے اعلان کیا ہے کہ عاشورہ کے دن کی عزاداری میں شرکت کے لئے جنوبی صوبے میسان کی سرحدی گزرگاہ الشیب کے ذریعے داخل ہونے والے ایرانی زائرین کی تعداد میں روز بروز اضافہ ہو رہا ہے۔
زائرین کرام کی تعداد جو اب روزانہ دو ہزار افراد کے لگ بھگ ہے، توقع کی جا رہی ہے کہ اگلے دو دنوں میں پانچ ہزار تک اور عاشورہ کے قریب پہنچنے کے ساتھ یہ تعداد روزانہ کی بنیاد پر 30 ہزار افراد تک جا پہنچے گی،کربلا کی بلدیہ نے عاشورہ کے موقع پر لاکھوں زائرین کے استقبال کے لئے صفائی شروع کر دی ہے.
سیکیورٹی فورسز نے بھی زائرین کرام کے راستے میں آنے والے علاقوں کو محفوظ بنانے کے لئے منصوبہ بندی شروع کر دی ہے،عراقی وزارت تیل نے بھی زائرین کرام کی خدمات کے لئے مختلف مقامات پر مراکز قائم کر دئے ہیں۔
اس سال محرم کی عزاداری کی تیاری کا سب سے اہم حصہ امن کو برقرار رکھنےکے لئے لاکھوں سیکورٹی فورسز کی تعیناتی ہے،اسی سلسلے میں عراق کے مختلف علاقوں میں انٹیلی جنس سرگرمیوں، سکیورٹی چوکیوں، عبادت کے مراکز اور ہر جگہ  جہاں مختلف خدمات کے مراکز قائم کئے گئے ہیں، سیکورٹی فورسز کی بڑی تعداد میں موجودگی کو مشاہدہ کیا جاسکتا ہے۔
تسنیم نیوز



آپکی رائے



میرا تبصرہ ظاہر نہ کریں
تصویر امنیتی :
Saturday - 2018 Nov 17