Friday - 2018 Oct. 19
Languages
دوستوں کو بھیجیں
News ID : 187055
Published : 3/5/2017 13:45

یمنی فوج کے ہاتھوں سعودی کا اہم اسلحہ ڈپو راکھ کے ڈھیر میں تبدیل

نجران میں واقع الفواز فوجی مرکز کے ہتھیاروں کے ڈپو کو تباہ کر دیا،یمنی فوج نے جیزان میں بھی الکرس فوجی مرکز کو نشانہ بنایا جس میں کئی سعودی فوجی ہلاک و زخمی ہو گئے۔

ولایت پورٹل:یمنی انقلابی فوج اور عوامی فورسز نے یمنی عوام کے خلاف سعودی عرب کی وحشیانہ جارحیت کے جواب میں سعودی عرب کے جنوبی علاقے نجران میں اس ملک کے فوجی ٹھکانوں کو اپنے حملوں کا نشانہ بنایا ہے،تفصیلات کے مطابق یمنی فوج نے منگل کی صبح سعودی عرب کی جارحیت کا جواب دیتے ہوئے اس ملک کے جنوبی علاقے نجران میں واقع الفواز فوجی مرکز کے ہتھیاروں کے ڈپو کو تباہ کر دیا،یمنی فوج نے جیزان میں بھی الکرس فوجی مرکز کو نشانہ بنایا جس میں کئی سعودی فوجی ہلاک و زخمی ہو گئے۔
جبکہ دوسری جانب یمن کے علاقوں الجوف، میدی اور مآرب میں یمنی انقلابی فوج نے کارروائی کرتے ہوئے متعدد سعودی ایجنٹوں کو ہلاک و زخمی کر دیا۔اقوام متحدہ کے انسانی حقوق کے ہائی کمشنر زید بن رعد نے جنیوا میں ایک پریس کانفرنس میں کہا ہے کہ قرائن و شواہد سے پتہ چلتا ہے کہ سعودی عرب یمن کی الحدیدہ بندرگاہ کو اپنے بڑے حملوں کا نشانہ بنانے کا منصوبہ بنا رہا ہے جبکہ اس بندرگاہ پر حملے کی صورت میں عام شہریوں کا بھاری جانی و مالی نقصان ہو گا اور صورت حال مزید ابتر ہو جائے گی۔
واضح رہے کہ یمن پر گذشتہ دو برسوں سے زائد عرصے سے سعودی عرب کی جاری وحشیانہ جارحیت میں اب تک بارہ ہزار سے زائد یمنی شہری شہید اور ہزاروں زخمی نیز دسیوں لاکھ دیگر بے گھر ہو چکے ہیں جبکہ اس ملک کی اسی فیصد سے زائد بنیادی تنصیبات بھی تباہ ہو چکی ہیں۔





آپکی رائے



میرا تبصرہ ظاہر نہ کریں
تصویر امنیتی :
Friday - 2018 Oct. 19